وزیر داخلہ چوہدری نثار کا کھاریاں ٹریننگ سینٹر میں نیشنل انٹیگریٹڈ کاونٹر ٹیررسٹ ٹریننگ کورس کی پاسنگ اوٹ پر جوانوں سے خطاب۔

کھاریاں (توقیر خان سے ) جنگ جیتنے کے لیے جذبہ ایمانی درکار ہوتا ہے ۔وہ جذبہ ہماری افواج اورقانون نافذکرنیوالےاداروں کےاہلکاروں میں ہے۔جن میں جذبہ شہادت ہو ان کو کوئی نہیں ہرا سکتا ۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کھاریان ٹریننگ سینٹر میں  نیشنل کاونٹر ٹیررسٹ ٹریننگ کورس  کی پاسنگ اوٹ تقریب میں  جوانوں سےخطاب۔ وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کا کہنا تھاکہ مجھے خوشی ہے کہ یہ سینٹر جو اج سے دو سال قبل ایک خاص مقصد کے لیے قائم کیا گیا۔ضرب حزب جب شروع ہوا تو فوج کے ساتھ ایک اسپیشل اینٹی ٹیررسٹ کورس کی ضرورت تھی اس کو کورس کا حصہ بنا یا گیا ۔ آج میں دیکھ رہا ہوں کہ ایک اچھی تربیت کا عمل جاری ہے ۔ اپ سب مبارک باد کے مستحق ہیں کہ چار ہفتے اپ اس ٹریننگ کا حصہ رہے ہیں۔ پاکستان کی حفاظت کی جنگ لڑنے کے لیے اپ تیار ہیں ۔ میں اپنے ایمان کی بنیاد پر کہتا ہوں ۔اپ کے پاس جو ہے وہ دشمن کے پاس نہیں ۔جنگیں ہتھیاروں سے نہیں لڑی جاتی وہ جزبے سے لڑی جاتی ہیں وہ جذبہ دشمن کے پاس نہیں  ہیں ۔ 65 کی جنگ میں میں نے دیکھا کہ کیا جذبات تھے اس وقت ایک ترانہ جو میں سنتا تھا کہ( اے پتر ہٹاں تے نہیں وکدھے) ۔جن کے اندر شہادت کا جذبہ موجود ہو ان کو کوئی ہرا نہیں سکتا ہے ۔ اپ پاکستان کے مجاہد و محافظ ہیں ایسی قوم اور ملک کے محافظ ہیں جو کلمہ کی بنیا د پر مارض وجود میں آئی ۔ ملک کی حفاظت اپ کے ہاتھوں میں ہے ۔ 70 سال سے ہم خطرات کا شکار رہے اور اپ جیسے جوانوں نے ملک کا دفا کیا۔ پچھلے چند سالوں سے ہمیں خظرہ سرحدوں سے نہیں اندروں ملک سے ہے۔ یہ ایسا خطرہ جس کا مقابلہ کرنا بہت مشکل ہے۔ دشمن اپ کا سامنا کرنے کے لیے تیار نہیں چھپ کر وار کرتے ہیں ۔ان میں کوئی اصول نہیں ۔ اسلام کا نام استعمال کرکے اسلام کا نام بدنام کر تے ہیں یہ چھپ کر وار کرنے والے ہیں اپ ہی کے ہاتھ میں ہی اسلام کا جھنڈا ۔ ایک طرف فساد بھرپا کرنے والے ہیں جن کے آگے کوئی روکاوٹ نہیں یہ بچوں، خواتین اور بزرگوں کو بھی قتل کرنے سے با زنہیں آتے ۔ انہیں اسلامی کہنا ظلم ہے۔ پاکستان کے جوانوں یہ اللہ کا کر م ہے کہ ان دس سالوں میں پاکستان کی افواج کی بہادری اور دلیری اور قربانیوں کے عوض دشمن کے ارادے خاکستر ہوئے ۔ ہمارے سول ارم فورسس ، حساس اداروں کے ذریعے امن قائم ہوا۔ جو دنیا میں ایک مثال ہے یہ اللہ کے کرم اور اپ کی کوشش سے ہوا۔ پاکستان کی قوم اپ پر فخر کرتی ہے پاکستان اپ کا احسان مند ہے۔ میں یقین دلاتا ہوں پاکستانی قوم اپ کی احسان مند ہے اور اپ کے کردار کو کبھی فراموش نہیں کرے گی۔ ہم اپنے غازیوں اور شہدا کے احسان مند ہے ۔ اپ نے اس کو آگے لے کر جانا ہے ۔ یہ اعلی ترین خدمت ہے جس کا حصہ اپ ہیں ۔ ہمارے دشمن فساد کو بھرپا کرنا چاہتے ۔ ہمارا ایمان ہے کہ شہادت عظیم مرتبہ ہے اسی عزم کے ساتھ ٹریننگ حاصل کریں اور اس کا استعمال کر یں گے۔ اس کا عملی طور پر مظاہر کرنا ہوگا پاکستان کے دشمنوں پر ضرب کاری لگا نا ہو گی۔ اور دشمن دیکھتا رہ جائے گا۔ مجھے آ پ پر فخر ہے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

WordPress.com.

Up ↑

%d bloggers like this: